چینی انکوائری کمیشن کی رپورٹ میں دوہفتے کی تاخیر ، شہبازشریف نے عمران خان پر سنگین الزام عائد کردیا

سوشل میڈیا‎‎

لاہور( این این آئی)پاکستان مسلم لیگ (ن)کے صدر و قائد حزب اختلاف محمد شہبازشریف نے چینی انکوائری کمیشن کی رپورٹ میں دوہفتے کی تاخیر کوملی بھگت قرار دیتے ہوئے کہا ہے کہ کابینہ، ای سی سی کی سربراہی اور سبسڈی کی منظوری دینے والے ذمہ دارہیں ۔ اپنے بیان میں انہوں نے کہا کہ فیصلوں کے ذمہ دار عمران نیازی اور عثمان بزدار ہیں حتمی رپورٹ نہ آنا عمران نیازی صاحب کا اعتراف جرم ہے ،حتمی رپورٹ میں تاخیر 100 ار ب روپے کے حکومتی ڈاکے کی تصدیق ہے ،تاخیر چینی ڈکیتی کے اصل ذمہ داروں کو بچانے کی کوشش

ہے ۔انہوںنے کہا کہ چینی انکوائری رپورٹ چھپانے سے عمران خان کا جرم چھپ نہیں سکتا،رپورٹ میں تاخیر سے عوام سے حقائق نہیں چھپائے جاسکتے ،عوام جانتے ہیں کہ ان کے آٹے چینی پر ڈاکہ کس نے ڈالا ،کسی مزید انکوائری اور فرانزک کی ضرورت نہیں ،انکوائری کمیشن منصفانہ نہیں ، کمیٹی کے ارکان ہی انکوائری کمیشن کے رکن بھی ہیں۔ا نہوں نے کہا کہ مسلم لیگ (ن) کے شاہدخاقان عباسی اور خرم دستگیر کو پیش ہو نے کی اجازت دی جائے ،ہمارے نامزد کردہ ارکان پیش ہوں گے تو دودھ کا دودھ اور پانی کا پانی ہوجائے گا۔

اس وقت زیادہ پڑھی جانے والی خبریں

    اس وقت زیادہ پڑھی جانے والی خبریں

    اوپر