رچون سطح پر گراں فروشی کا سلسلہ عروج پر ،رمضان کے چھٹے روزہ بھی یوٹیلیٹی  سٹورزپررمضان پیکج کے تحت مختلف اشیاء کی قلت دور نہ ہو سکی‘ صارفین پریشان

سوشل میڈیا‎‎

لاہور( این این آئی )صوبائی دارالحکومت میں پرچون سطح پر گراں فروشی کا سلسلہ عروج پر ہے ، دکانداروںنے سبزیوںاور پھلوں کی مقررہ قیمتوں سے زائد پر فروخت جاری رکھی ،برائلر گوشت کی قیمت میں بھی 15روپے فی کلو اضافہ ریکارڈ کیا گیا ،رمضان کے چھٹے روزہ بھی یوٹیلیٹی سٹورزپررمضان پیکج کے تحت مختلف اشیاء کی قلت دور نہ ہو سکی ۔ سرکاری نرخنامے کے مطابق سبزیوں میں ایک کلو آلو نیا کچا چھلکااول55روپے کی بجائے 65روپے سے 70روپے ،پیاز درجہ اول 38روپے کی بجائے 45روپے،ٹماٹر درجہ اول28روپے کی بجائے35روپے ، لہسن دیسی150کی بجائے200سے210،ادرک تھائی لینڈ230کی بجائے330

سے 340روپے،ادرک چائنہ310کی بجائے360سے380روپے،کھیرا دیسی 29کی بجائے35سے 38روپے،کھیرا فارمی 22کی بجائے28سے 30روپے،لہسن ہرنائی 160کی بجائے 220روپے،کریلے 32کی بجائے40سے 45،پالک 18کی بجائے 22سے 25روپے ،میتھی 67کی بجائے75سے 80،بینگن27کی بجائے40روپے،بند گوبھی27کی بجائے35سے 38روپے،پھول گوبھی 24کی بجائے 30سے 35،سبز مرچ اول83کی بجائے140سے 150روپے،شملہ مرچ30کی بجائے40سے 45، گھیا کدو27کی بجائے36روپے،گھیا توری47بجائے 60سے 65،لیموں چائنہ225کی بجائے380سے 400روپے،لیموں دیسی 310روپے کی بجائے 400سے 410،بھنڈی 90کی بجائے 130سے 140،شلجم 13کی بجائے17سے 20،مٹر 105کی بجائے120سے 130روپے ،اروی 93کی بجائے 120سے 130روپے اورگاجر چائنہ30کی بجائے38سے 42روپے کلو تک فروخت کی گئی ۔ پھلوں میں سیب کالا کولو پہاڑی درجہ اول230کی بجائے310روپے، سیب کالا کولو پہاڑی درجہ دوئم 190کی بجائے230روپے، سیب ایرانی185کی بجائے230روپے،سیب سفید اول120کی بجائے170سے 180روپے،کیلا اول درجن 165کی بجائے220روپے،کیلا دوئم درجن90کی بجائے140روپے، سٹابری اول120کی بجائے170روپے، کھجور اصیل اول235کی بجائے350سے 260روپے،کینو فی درجن اول130کی بجائے260سے 280روپے،امردو درجہ اول135کی بجائے 170سے 180روپے،تربوزفی کلو 38کی بجائے45سے 50روپے،فالسہ 440کی بجائے 520سے 530اورلوکاٹھ 150کی بجائے 170روپے فی کلو تک فروخت کی گئی۔ شہر میں پرچون سطح پر برائلر گوشت کی قیمت 15روپے اضافے سے212روپے، زندہ برائلر مرغی10روپے اضافے سے146روپے فی کلو جبکہ فارمی انڈوں کی قیمت88روپے فی درجن پر مستحکم رہی۔دوسری جانب حکومت کی جانب سے یوٹیلٹی سٹورز پر بیسن اور دالیں فراہم نہ کی جا سکیں جبکہ کھجوریں بھی مارکیٹ ریٹ سے زائد میں فروخت ہوتی رہیں۔صارفین کے مطابق یوٹیلٹی سٹورز پر رمضان پیکج کے تحت آنے والے کئی اشیاء دستیاب نہیں ہوتیں۔

اس وقت زیادہ پڑھی جانے والی خبریں

    اس وقت زیادہ پڑھی جانے والی خبریں

    اوپر