نایاب لکڑبھگے کا علاج جاری

سوشل میڈیا‎‎

پشاور (این این آئی)چند روز قبل ڈیرہ اسماعیل خان میں کوہ سلیمان کے پہاڑی سلسلے سے پکڑے جانے والے نایاب جنگلی لکڑ بگھے کا علاج جاری ہے ،اس کے مستقبل کا فیصلہ کرنے کے لیے ایک کمیٹی قائم کر دی گئی ہے۔ویٹرنری آفیسر چڑیا گھرڈاکٹر عبدالقادر نے بتایا کہ زخمی لکڑبگھے کی آگے والی ٹانگوں پر زخم ہیں جن کاعلاج کیا جا رہا ہے۔ انہوں نے بتایا کہ پکڑے گئے اس نایاب جنگلی کی حالت خطرے سے باہر ہے، اسے چڑیا گھر میں ہی آئسولیشن میں رکھا گیا ہے

اور اسے صحت یاب ہونے میں دو ہفتے لگیں گے۔ ویٹرنری آفیسر چڑیا گھر کے مطابق جانور کی عمر 2 سے 3سال کے درمیان ہے اور عموماً ان کی عمر 15 سے 20 سال ہوتی ہے  جب کہ یہ کسی کے ہاتھ آنے کی بجائے مرنا پسند کرتے ہیں۔ انہوں نے بتایا کہ نایاب جنگلی جانورکو روزانہ ایک کلو گرام گوشت دیا جارہا ہے۔انہوںنے کہاکہ ایک کمیٹی قائم کر دی گئی ہے جو کہ اس بات کا فیصلہ کریگی کہ آیا لکڑ بھگے کو صحتیاب ہونے کے بعد پھر جنگل میں چھوڑا جائے یا اسے چڑیا گھر میں ہی رکھا جائے۔

اس وقت زیادہ پڑھی جانے والی خبریں

    اس وقت زیادہ پڑھی جانے والی خبریں

    اوپر