پاکستان کو بیرونی قرضوں کی ادائیگی میں بڑا ریلیف مل گیا، وزیراعظم کی اپیل کام کر گئی

سوشل میڈیا‎‎

ٓاسلام آباد(آن لائن) پاکستان کو بیرونی قرضوں کی ادائیگی میں بڑا ریلیف، پیرس کلب نے رواں سال مئی سے دسمبر کے دوران واجب الادا قرض کی وصولی موخر کردی۔ پاکستان نے ایک برس کے دوران پیرس کلب کو 78کروڑ 80لاکھ ڈالر ادا کرنے ہیں جبکہ پاکستان پیرس کلب کا مجموعی طورپر10ارب 92کروڑ ڈالر کا مقروض ہے۔ بدھ کے روز جاری اعلامیے کے مطابق پیرس کلب نے پاکستان کا یکم مئی سے 31دسمبر 2020 تک واجب الادا قرض موخر کردیا ہے جس سے پاکستان کو کورونا وبا سے نمٹنے اور قرضوں کی ادائیگی

میں سہولت ہوگی۔ اس سے قبل جی ٹوئنٹی ممالک بھی قرضوں کو موخر کرنے کی توثیق کر چکے ہیں۔ پیرس کلب میں کینیڈا، فرانس، جرمنی، جاپان، کوریا اور امریکہ سمیت 17ممالک شامل ہیں۔ پاکستان نے ایک برس کے دوران پیرس کلب کا 78کروڑ 80لاکھ ڈالر کا قرض ادا کرنا ہے جبکہ مجموعی طور پر 10ارب 92کروڑ ڈالر پاکستان کے ذمے واجب الادا ہیں۔ واضح رہے کہ وزیراعظم عمران خان نے پاکستان سمیت 76ترقی پذیر ممالک کو قرضوں میں ریلیف کے لئے عالمی مالیاتی اداروں اور ترقی یافتہ ممالک سے اپیل کی تھی۔

اس وقت زیادہ پڑھی جانے والی خبریں

    اس وقت زیادہ پڑھی جانے والی خبریں

    اوپر