مولانا فضل الرحمان سے رانا ثناء اللہ کی لیگی وفد کے ہمراہ ملاقات، انتہائی دھماکہ خیز فیصلے

سوشل میڈیا‎‎

اسلام آباد(آن لائن)جمیعت علمائے اسلام (ف) کے سربراہ مولانا فضل الرحمان سے مسلم لیگ (ن) کے رہنما رانا ثناء اللہ نے وفد کے ہمراہ ملاقات کی جس میں اٹھارہویں ترمیم، بجٹ اجلاس میں اپوزیشن کا مشترکہ لائحہ عمل، کورونا پر حکومتی حکمت عملی اور پنجاب میں ہونے والی آل پارٹیز کانفرنس پر تبادلہ خیال کیا گیا۔

میڈیا رپورٹس کے مطابق بدھ کے روز جمیعت علمائے اسلام (ف) کے سربراہ مولانا فضل الرحمان سے مسلم لیگ ن کے وفد نے ملاقات کی ہے۔ وفد نے رانا ثناء اللہ کی سربراہی میں ملاقات کی جبکہ خرم دستگیر اور محسن شاہنواز رانجھا بھی ملاقات کرنے والوں میں شامل تھے۔ اس موقع پر میڈیا سے گفتگو کرتے ہوئے رانا ثناء اللہ نے کہا کہ ہم مولانا فضل الرحمان کی خیریت دریافت کرنے آئے ہیں۔ ان سے اٹھارہویں ترمیم کے حوالے سے بات چیت ہوئی ہے اورپنجاب میں ہونے والی آل پارٹیز کانفرنس کے بارے میں بھی مشاورت ہوئی ہے۔ رانا ثناء اللہ نے کہا کہ نیب حکومت کے ہاتھ کا ہتھیار ہے لیکن اپوزیشن بے بس نہیں ہے۔ بجٹ اجلاس میں ایوان میں اپوزیشن کا مشترکہ لائحہ عمل ہوگا۔ مسلم لیگ ن کے وفد کی مولانا فضل الرحمان سے ملاقات میں کورونا وائرس سے متعلق حکومتی حکمت عملی پر بھی تبادلہ خیال کیا گیاہے۔

اس وقت زیادہ پڑھی جانے والی خبریں

    اس وقت زیادہ پڑھی جانے والی خبریں

    اوپر