افضل خان کو 2 کروڑ روپے کا قانونی نوٹس ارسال

جنرل خبریں

اسلام آباد: الیکشن کمیشن کے موجودہ رکن جسٹس ریٹائرڈ ریاض کیانی نے پنجاب سے الیکشن کمیشن کے سابق رکن اور ایڈیشنل سیکریٹری الیکشن کمیشن افضل خان کو 2 کروڑ روپے کا نوٹس ارسال کر دیا۔

ریاض کیانی کی جانب سے ارسال کے گئے قانونی نوٹس میں مطالبہ کیا گیا ہے کہ آئندہ 14 روز میں افضل خان ان پر لگائے گئے الزامات پر معافی مانگیں۔

قانونی نوٹس کے مطابق اگر سابق ایڈیشنل سیکریٹری نے الیکشن کمیشن کے رکن ریاض کیانی کو بدنام کرنے کی کوشش پر معافی نہ مانگی تو کیانی ان کے خلاف مزید قانونی چارہ جوئی کا حق محفوظ رکھتے ہیں۔

ریاض کیانی کی جانب سے قانونی نوٹس میں موقف اختیار کیا گیا ہے کہ افضل خان کی جانب سے ٹی وی پروگرام میں لگائے جانے والے الزامات حقائق پر مبنی نہیں ہیں جس سے ان کی شہرت کو شدید نقصان پہنچا۔

یاد رہے کہ سابق ایڈیشنل کمشنر الیکشن کمیشن افضل خان نے ایک پروگرام میں گزشتہ انتخابات میں بڑے پیمانے پر دھاندلی کا الزام عائد کیا تھا جس میں انہوں نے سابق چیف جسٹس سپریم کورٹ افتخار چوہدری اور کیانی کو اس دھاندلی کا مرکزی کردار بھی قرار دیا تھا۔

افضل خان نے الزام لگایا تھا کہ افتخار چوہدری نے الیکشن کمیشن کے مینڈیٹ کی بھی خلاف ورزی کی تھی اور ریٹرننگ افسران تعینات کیے تھے اور اپنے کردار کو مخفی رکھنے کے لیے وہ الیکشن کمشنر فخر الدین جی ابراہیم کے کردار پر اثار انداز ہوئے تھے۔

ریاض کیانی کا کہنا تھا کہ افضل خان کو ملازمت میں توسیع نہ ملنے پر وہ ناراض تھے اسی وجہ سے اب عجیب و غریب الزامات لگا رہے ہیں۔

Jamila copy

ہمارے بلاگ کے لیے لکھنا چاہتے ہیں؟

اپ ایک قلم اٹھائے اور 500 سے 1000 الفاظ کا ایک مضمون لکھیں، اور اسے [email protected] پر اپنی رابطے کی تفصیلات کے ساتہ بھیجین اور اسے شائع ھوتا دیکھ

اس وقت زیادہ پڑھی جانے والی خبریں

اس وقت زیادہ پڑھی جانے والی خبریں

اوپر