ملالہ یوسفزئی کو امریکہ کا ’’ لبرٹی میڈل’ بھی مل گیا

جنرل خبریں

فلاڈیلفیا: دنیا کی کم عمر ترین نوبل انعام یافتہ پاکستانی طالبہ ملالہ یوسفزئی کی فروغ تعلیم کے لئے خدمات کا اعتراف کرتے ہوئے امریکا کا ’’ لبرٹی میڈل’’ دے دیا گیا ہے ۔
امریکہ کے شہر فلاڈیلفیا کے نیشنل کانسٹیٹیوشن سینٹر میں منعقدہ تقریب کے دوران ملالہ یوسفزئی کی کوششوں اور تعلیم کے لئے اعلی خدمات کا اعتراف کرتے ہوئے انہیں لبرٹی میڈل سے نوازا گیا جو انسانیت کی خدمت کے اعتراف میں دیا جاتا ہے جبکہ انہیں بطور انعام ایک لاکھ امریکی ڈالر بھی دیئے گئے۔ میڈل حاصل کرنے کے بعد تقریب سے خطاب کرتے ہوئے ملالہ یوسفزئی کا کہنا تھا کہ لبرٹی ایوارڈ حاصل کرکے فخر محسوس کر رہی ہوں جس کے حصول کے بعد تعلیم کے فروغ اور بچوں کے حقوق کے لئے جاری مہم کو مزید تیز کرنے کی حوصلہ افزائی ہوگی۔ ملالہ نے انعامی رقم پاکستان میں تعلیم کے فروغ کے لئے وقف کرنے کا اعلان کرتے ہوئے کہا کہ تعلیم بہترین ہتھیار ہے جس کے ذریعے غربت، جہالت اور دہشتگردی کا خاتمہ کیا جاسکتا ہے۔ انہوں نے تمام ممالک سے اپیل کی کہ وہ ہتھیاروں کے بجائے تعلیم پر رقم خرچ کریں جس میں بچوں کا مستقبل پوشیدہ ہے۔ اس موقع پر این سی سی کے چیئرمین جیب بش کا کہنا تھا کہ ملالہ یوسفزئی کی ا?زادی اور برابری کے لئے جاری لڑائی اس بات کا ثبوت ہے کہ وہ ایسی رہنما ہیں جو تعلیم کے لئے مخلص ہیں اور تمام نوجوانوں کو ملالہ کے نقش قدم پر چل کر اسٹیٹس کو کے خاتمے اور دنیا بھر میں تبدیلی کے لئے کوششیں کرنی چاہیئے۔ این سی سی کی جانب سے ’’ لبرٹی میڈل ’’ ایسے افراد کو دیا جاتا ہے جن کی خدمات عام فرد کے لئے ہوں جبکہ ملالہ یوسفزئی سے قبل یہ میڈل سابق امریکی صدور ایچ ڈبلیو بش، بل کلنٹن کے علاوہ نیلسن منڈیلا، شیمون پریس، کوفی عنان اور بونو کو دیا جاچکا ہے۔

1920494_788318571228423_4576465192508598064_n

اس وقت زیادہ پڑھی جانے والی خبریں

    اس وقت زیادہ پڑھی جانے والی خبریں

    اوپر