استعمال شدہ پلاسٹک کے بدلے کھانا کہاں ملتا ہے ؟

دلچسپ و عجیب

رائے پور(این این آئی) ماحول کو صاف بنانے اور عوام میں صفائی کا شعور اجاگر کرنے کے لیے سٹی میونسپل کارپوریشن کی جانب سے ریاست چھتیس گڑھ کے شہر امبیکاپور میں گاربیج کیفے کھولا گیا ہے، چھتیس گڑھ کے ہیلتھ منسٹرٹی ایس سنگھیو نے اس ہوٹل کا افتتاح کیا جس میں شہری 1 کلو پلاسٹک کا کچرا جمع کرانے کے بدلے میں ایک وقت کا کھانا حاصل کر سکیں گے۔بھارتی میڈیا کے مطابق یہ اقدام بھارتی وزیراعظم مودی کی ہدایت پر عمل میں لایا گیا ہے، مودی سرکار کا منصوبہ ہے کہ 2022 تک بھارت کو پلاسٹک فری ملک بنانا

ہے۔بھارتیپلاسٹک ویسٹ منیجمنٹ کے قانون 2016 کے مطابق 51 مائیکرونز سے زائد وزن رکھنے والے تمام پلاسٹک بیگ بین کر دیئے گئے ہیں جبکہ مقامی انتظامیہ نے پلاسٹک کی تھیلیاں بنانے والی کمپنیوں، خریدار وں اور بیچنے والے افراد کے خلاف کریک ڈاون بھی شروع کر رکھا ہے۔مقامی تاجروں کے مطابق حکومت کی پلاسٹک کے استعمال پر پابندی کے بعد ان کا کاروبار بری طرح سے متاثرہو رہا ہے اور بہت سارے پلاسٹک کا کاروبار کرنے والے تاجر الجھن کا شکار ہیں کہ کس قسم کے پلاسٹک پر پابندی عائد کی گئی ہے اور کس پر نہیں۔

اس وقت زیادہ پڑھی جانے والی خبریں

اس وقت زیادہ پڑھی جانے والی خبریں

اوپر