مقبوضہ کشمیر : بھارتی فوجیوں نے گزشتہ ماہ 10کشمیریوں کو شہیدکیا

انٹرنیشنل

سرینگر(این این آئی)مقبوضہ کشمیر میں بھارتی فوجیوں نے اپنی ریاستی دہشت گردی کی جاری کارروائیوں کے دوران گزشتہ ماہ اکتوبرمیں 10کشمیریوں کو شہید کیا۔کشمیر میڈیا سروس کے ریسرچ سیکشن کی طرف سے آج جاری کئے گئے اعدادوشمار کے مطابق ان میں سے ایک نوجوان کو جعلی مقابلے میں شہید کیاگیا۔اس عرصے کے دوران بھارتی فوجیوں اور پولیس اہلکاروں کی طرف سے پرامن مظاہرین پر گولیوں، پیلٹ گنز اور آنسو گیس کے بے دریغ استعمال سے 57افرادشدیدزخمی جبکہ 67شہریوں کو گرفتار کیا جن میں سے بیشترحریت کارکن اور نوجوان شامل تھے ۔بھارتی فوجیوںنے اس عرصے کے دوران تلاشی اور محاصرے کی کارروائیوںکے

دوران زبردستی گھروںمیں داخل ہو کر 30خواتین کی آبروریزی یا بے حرمتی کی اور3 گھروں کو نقصان پہنچایا۔قابض انتظامیہ نے 5اگست کے بعد سے لوگوں کو سرینگر کی تاریخی جامع مسجد ،درگاہ دستگیر صاحب اوردیگربڑی مساجد میں لوگوں کو نماز جمعہ ادا کرنے کی اجازت نہیں دی۔ یاد رہے کہ گزشتہ ماہ مقبوضہ علاقے میں بھارتی خفیہ ایجنسیوں نے 12کے قریب غیر کشمیری مزدوروںاورڈرائیوروں کو قتل کردیا۔ ادھر نامعلوم مسلح افراد نے ضلع کولگام کے علاقے بونی گام میں دو مسافر گاڑیوں کو نذر آتش کردیا جس میں سے ایک گاڑی بی جے پی کے مقامی لیڈر کی تھی۔بھارتی فوجیوںنے علاقے کی ناکہ بندی کر کے تلاشی کی کارروائی شروع کر دی ہے ۔

اس وقت زیادہ پڑھی جانے والی خبریں

اس وقت زیادہ پڑھی جانے والی خبریں

اوپر