عوام نہ گھبرائے، ایران سے آنے والے 1500 افراد کی شناخت ہوگئی ، اب ان کیساتھ کیا کیا جائیگا؟حکومت نے بڑا اعلان کردیا

اہم خبریں

کراچی(این این آئی)وزیر اعلی سندھ سید مراد علی شاہ نے کہاہے کہ عوام نہ گھبرائیں پریشانی کی بات نہیں ہے، ایران سے آنے والے 1500 افراد کی شناخت ہوگئی ہے ، اب ان کی اسکریننگ کی جائے گی۔وزیر اعلی سندھ مراد علی شاہ کی زیر صدارت اہم اجلاس ہوا۔ جس میں چیف سیکرٹری سید ممتازعلی شاہ، وزیر صحت ڈاکٹرعذرافضل پیچوہو،وزیر بلدیات سید ناصرحسین شاہ، ترجمان سندھ حکومت مرتضی وہاب، ڈی جی رینجرزمیجرجنرل محمدعمرو دیگر نے شرکت کی۔اجلاس میں وزیر اعلی سندھ کو بریفنگ دی گئی اور بتایا گیا کہ اوجھا کیمپس، سول اسپتال، لیاری اسپتال، میرپورخاص سول اسپتال ،گمس سکھر، پمس

نواب شاہ، لمس حیدرآباد، سی ایم سی ایچ لاڑکانہ میں آئیسولیشن وارڈ بنائے گئے ہیں۔بریفنگ میں بتایا گیا کہ وزیراعلی کی ہدایت پر محکمہ صحت میں ایمرجنسی سیل قائم کیا گیا ہے۔سیکرٹری صحت نے وزیر اعلی سندھ کو بتایا کہ کورونا وائرس کے مریض کے ساتھ جو 28 لوگوں کا گروپ تھا اس کو نشاندہی کرلی گئی ہے اور ان کے ساتھ رابطہ بھی قائم ہوگیا ہے۔وزیراعلی نے اجلاس میں کورونا وائرس کے مریضوں کے ساتھ سفرکرنے والے 28 افرادکی بھی اسکریننگ کرنے کا کہا، سیکریٹری صحت نے بتایا کہ یہ تمام 28 لوگ خود بھی محکمہ صحت سے رابطے میں ہیں اور تعاون کر رہے ہیں۔وزیر اعلی نے کہاکہ ان افراد کی تمام تفصیلات کو ریکارڈ کا حصہ بنایا جائے، متاثرہ افراد کو اگر اسپتال میں نہیں رکھ سکتے تو گھروں میں قرنطینہ میں رکھیں۔اس موقع پر وزیراعلی سندھ نے متعلقہ ڈاکٹرز کو ویڈیو پیغام جاری کرنے کی ہدایت بھی کی ۔وزیراعلی سندھ نے محکمہ صحت کو ہدایت جاری کرتے ہوئے کہا کہ جو اشیاء اسپتالوں کے لیے چاہیے اس کی فوری خریداری کی جائے۔اجلاس میں بتایا گیا کہ ایران میں 2 فروری کو کورونا وائرس کے مریضوں کی تصدیق ہوئی تھی۔

اس وقت زیادہ پڑھی جانے والی خبریں

اس وقت زیادہ پڑھی جانے والی خبریں

اوپر