اسلام آباد آزادی مارچ،یہ دو مطالبات منظور ہوئے بغیر ہم ہر گز پیچھے نہیں ہٹیں گے،جے یو آئی(ف) نے دوٹوک اعلان کردیا

پاکستان

بنوں (این این آ ئی)رہبر کمیٹی کے چیئرمین وخیبر پختونخوا کے اپوزیشن لیڈر اکرم خان درانی نے اپوزیشن جماعتوں کے کارکنوں کے مختلف وفود سے بات چیت کرتے ہوئے کہا ہے کہ اپوزیشن جماعتوں میں مثالی اتحاد آزادی مارچ کی کامیابی کے علامت ہے ہم نے مشترکہ طور پر آزادی مارچ کے لئے جو اہداف رکھے ہیں اس پر قائم ہیں اور اس سے پیچھے نہیں ہٹے اور

یہی وجہ ہے کہ ہماری آزادی مارچ سے خوفزہ ہیں اور ان کو خوفزدہی ہونا بھی چاہئے کیونکہ آزادی مارچ کا سیلاب ان سب کو بہا کر لے جائے گا مخالفین جے یوآئی اس لئے ہمارے خلاف باتیں کررہے ہیں لیکن اس سے ہمارے حوصلے پست نہیں بلکہ مزید مضبوط ہورہے ہیں وفود میں پاکستان مسلم لیگ اور دیگر جماعتیں شامل تھیں اُنہوں نے کہاکہ میری گرفتاری کی باتیں افواہ اور بے بنیا د ہیں اس میں حقیقت نام کی کوئی چیز نہیں صوبائی وزیر شوکت یوسفزئی کی حیثیت کیا ہے وہ شاہ سے زیادہ شاہ کا وفادر ثابت کر رہا ہے وہ کون ہوتا ہے کہ وہ جے یو آئی اور اپوزیشن کمیٹی بارے خلا ف باتیں کررہے ہیں یہ سب کچھ وہ خود کو نمایاں کرنے کیلئے کررہے ہیں اس کے علاوہ وفاقی وزیر پرویز خٹک بھی میڈیا کے سامنے جھوٹ بول رہے ہیں ہم اپنے مطالبات سے پیچھے نہیں ہٹے ہمارا پہلا مطالبہ اب بھی وہی ہے کہ وزیر اعظم مستعفی ہوجائیں غیر جانبدار اور فوری مداخلت کے بغیرنئے انتخابات کرائے جائیں وزیر اعظم کے استعفے کے بغیر مذاکرات نہیں بڑھ سکتے انہوں نے کہا کہ کمیٹی نے فیصلہ کیا ہے کہ ہم ریڈزون میں داخل نہیں ہوں گے مین کشمیر ہائی وے پر آزادی ملین مارچ کریں گے اور لائحہ عمل بھی موقع پر حالات کے مطابق تیار کریں گے۔

اس وقت زیادہ پڑھی جانے والی خبریں

    اس وقت زیادہ پڑھی جانے والی خبریں

    اوپر