نصیر الدین شاہ نے نام نہاد سیکولرازم کا بھانڈا پھوڑ دیا، مودی سرکار کی بولتی بند کرتے ہوئے ایساکیا کہہ دیا کہ انتہا پسند ہندوان کی جان کے دشمن بن گئے

شوبز

ممبئی(آئی یان پی ) بالی وڈ اداکار نصیر الدین شاہ نے نام نہاد سیکولرازم کا بھانڈا پھوڑ تے ہوئے کہا ہے کہ بھارت میں مذہب کی بنیاد پر معصوموں کا قتل عام ہو رہا ہے، ادیب، فنکار اور صحافیوں کا جینا حرام کر رکھا ہے، کیا ایسے بھارت کا خواب دیکھا تھا۔ تفصیلات کے مطابق بالی وڈ اداکار نصیر الدین شاہ بھارت میں انتہا پسندی کے بڑھتے واقعات پر پھٹ پڑے۔ ایمنسٹی انٹرنیشنل کی ایک ویڈیو میں اپنی تشویش کا اظہار کرتے ہوئے انہوں نے کہا بھارت میں مذہب کی بنیاد پر نفرت کا بازار گرم ہے۔ادیبوں، فنکاروں اور صحافیوں

کو طاقت کے استعمال سے چپ کرایا جا رہا ہے۔ نصیر الدین شاہ نے استفسار کیا کیا ہم نے ایسے ملک کا خواب دیکھا تھا جہاں اختلاف کی گنجائش نہ ہو۔ یاد رہے گزشتہ سال دسمبر میں بھی پنے ایک بیان میں اداکار کا کہنا تھا کہ وہ اپنے بچوں کی حفاظت اور مستقبل کے لیے فکرمند ہیں، جہاں گائے کو ذبح کیے جانے کو پولیس اہلکار کے قتل سے زیادہ اہمیت دی جاتی ہے۔ اس بیان کی وجہ سے نصیر الدین شاہ کو انتہا پسند ہندوئوں کے غم و غصے کا سامنا کرنا پڑا۔

اس وقت زیادہ پڑھی جانے والی خبریں

اوپر