ایرانی بیلسٹک میزائل پروگرام جوہری ہتھیاروں پر محیط نہیں بلکہ ۔۔ انتباہ جاری کر دیا گیا

سوشل میڈیا‎‎

تہران (این این آئی)ایرانی وزیر خارجہ محمد جواد ظریف نے کہاہے کہ ان کے ملک کا بیلسٹک میزائل پروگرام جوہری اسلحہ کے لیے نہیں ہے۔میڈیارپورٹس کے مطابق ظریف نے اپنے سرکاری ٹویٹر اکاؤنٹ کے ذریعے بیان میں فرانسیسی صدر امینول ماکرون اور امریکی صدر ڈونلڈ ٹرمپ کے ایران کے بیلسٹک میزائل پروگرام کے بارے میں بیانات پر نکتہ چینی کی۔ ظریف نے ا س بات کا دفاع کیا کہ امریکہ نے جوہری معاہدے سے علیحدگی اختیار کرتے ہوئے اقوام متحدہ کی سلامتی کونسل کی قرار داد نمبر 2231 کی

خلاف ورزی کی ہے اور اپنے اتحادیوں کے ایران کے ساتھ اقتصادیتعلقات کو معمول پر لانے کے ارادے کو پاؤں تلے روندھا ہے۔امریکی وزیر خارجہ مائیک پومپیو کے ایران کے 2231 قرار داد کی رو سے جائزات پر تنقید کرنے والے ظریف نے بتایا کہ پومپیو کے دعووں کے برعکس مذکورہ شق ایران سے بعض مطالبات کرتی ہے اور اس پر بعض اقدامات سے باز نہیں رکھتی۔ ویسے بھی ہمارا بالسٹک میزائل پروگرام جوہری اسلحہ کے استعمال کا مقصد نہیں رکھتا اور نہ ہی ہم جوہری اسلحہ کے حصول کے درپے ہیں۔

اس وقت زیادہ پڑھی جانے والی خبریں

اس وقت زیادہ پڑھی جانے والی خبریں

اوپر