وزیراعظم عمران خان نے معاون خصوصی ندیم بابر سے پاور ڈویژن کا قلمدان واپس لے لیا، نوٹیفیکیشن جاری

سوشل میڈیا‎‎

اسلام آباد (آن لائن) معاون خصوصی ندیم بابر سے پاور ڈویژن کا قلمدان واپس لے لیا گیا، وزیراعظم عمران خان نے ندیم بابر کی جگہ شہزاد قاسم کو پاور ڈویڑن کا قلمدان سونپ دیا۔ کیبنٹ ڈویژن سے جاری نوٹیفیکیشن کے مطابق وزیراعظم عمران خان نے ندیم بابر سے معاون خصوصی برائے پاور ڈویژن کا قلمدان واپس لے لیا ہے جبکہ انکی جگہ شہزاد قاسم کو پاور ڈویڑن کیلئے وزیراعظم کا معاون خصوصی تعینات کردیا گیا ہے۔

نوٹیفکیشن کے مطابق شہزاد سید قاسم کے اختیارات وزیرِ مملکت کے برابر ہوں گے۔ دوروز قبل انہیں پٹرول بحران پر قائم ہونے والی کمیٹی کا چیئرمین مقرر کیا گیاتھا اس سے قبل وہ معاون خصوصی برائے معدنی وسائل کے طور پر کام کررہے تھے جبکہ دو روز قبل انکی وزیر اعظم سے ملاقات بھی ہوئی تھی۔دوسری جانب ذرائع کا کہناہے کہ ندیم بابر سے پاور ڈویژن کے خصوصی معاون کا چارج واپس لینے کی خبریں غلط ہیں۔ندیم بابر کے پاس پٹرولیم کے معاون خصوصی کا عہدہ تھا جو اب بھی ہے پاور ڈویژن کا نہیں تھا۔معاون خصوصی برائے پٹرولیم ڈویژن کا قلمدان انکے پاس ہی رہے گا۔ واضح رہے کہ رواں سال اپریل میں پاور سیکٹر انکوائری رپورٹ میں ندیم بابر آئی پی پیز کے دفاع میں سامنے آگئے تھے اور وزیراعظم عمران خان کی پالیسی کی بجائے آئی پی پیز کے شانہ بشانہ کھڑے ہو گئے تھے۔میڈیارپورٹس کے مطابق ندیم بابر نے وفاقی وزیر پاور ڈویڑن عمر ایوب کو خط لکھ کر مذاکراتی کمیٹی کے سربراہ وفاقی وزیر عمر ایوب کی سوچ بدلنے کی کوشش کی تھی۔ندیم بابر کے پاورپلانٹ، اورینٹ نے ایک سال میں 2ارب روپے اضافی منافع کمایا تھا جبکہ ندیم بابر کا موقف ہے کہ وہ اورینٹ پاور میں حصہ دار ہیں جس نے 2 ارب نہیں صرف 16 کروڑ روپے فیول کھپت میں بچائے ہیں۔ ندیم بابر کا کہنا تھا کہ وہ انکوائری رپورٹ سے مایوس ہوئے ہیں۔ اپنے خط میں اْنہوں نے لکھا تھا کہ آئی پی پیز پر الزامات کی بجائے اعتماد کا ماحول بنائیں، صرف چند آئی پی پیز نے اضافی منافع کمایا ہے۔ اب ان سے پاور ڈویڑن کا قلمدان واپس لے لیا گیا ہے۔

اس وقت زیادہ پڑھی جانے والی خبریں

    اس وقت زیادہ پڑھی جانے والی خبریں

    اوپر