پارلیمنٹ میں شورشرابالیکن۔۔۔ شام میں میری شہبازشریف اور بلاول بھٹو سے ملاقات ہوئی ، دونوں کی حالت کیسی تھی؟شیخ رشید نے بڑا دعویٰ کردیا

سوشل میڈیا‎‎

راولپنڈی (این این آئی)وزیر ریلوے شیخ رشید احمد نے کہا ہے اپوزیشن کی ٹائی ٹائی فش ہوگئی ہے ۔ایف اے ٹی ایف سے متعلق قانون سازی حکومت کی بہت بڑی فتح ہے ،20 اور 22 کو اپوزیشن کی کانفرنس اور اے پی سی ناکام ہوگی ، یہ سوائے جلسے اور جلوسوں کے سوا کچھ نہیں کرسکتے۔

نوازشریف این آر او کی تلاش میں ہیں ،پاکستان نے این آر او کو ہمیشہ ہمیشہ کے لیے دفن کر دیا ہے۔ جمعرات کو تقریب سے خطاب کے بعد میڈیا سے گفتگو میں انہوں نے کہا کہ اپوزیشن کی ٹائی ٹائی فش ہوگئی ہے، گزشتہ روز فنانشل ایکشن ٹاسک فورس (ایف اے ٹی ایف) سے متعلق قانون سازی حکومت کی بہت بڑی فتح ہے، حکومت نے ایک پل عبور کیا ہے اور ثابت کیا کہ اس نے بارگیننگ نہیں کی۔انہوں نے کہا کہ حکومت نے منی بل پر سرنڈر نہیں کیا، نیب کے کیسز میں جھکاؤ نہیں کیا جبکہ اپوزیشن نے ایف اے ٹی ایف جو حساس نوعیت کا بل تھا اس کی مخالفت کی۔شیخ رشید احمد نے کہاکہ مجھے امید ہے کہ 20 تاریخ کو اپوزیشن اپنے سے بڑا کوئی فیصلہ نہیں کریگی، نہ وہ کرسکتی ہے، سینیٹ کے انتخابات میں ان کے 64 اراکین ہوتے ہیں اور وہ اس کمرے سے اْس کمرے میں جانے سے 44 ہوجاتے ہیں ۔ان کے 38 اراکین کم تھے۔انہوں نے کہا کہ اپوزیشن کو اتنا رگڑا لگا کہ جو بل منظور نہیں ہونے والے تھے وہ بھی حکومت نے منظور کروا دئیے۔

بات کو جاری رکھتے ہوئے انہوں نے کہا کہ جو لوگ یہ طعنہ دے رہے ہیں کہ قانون کو روندا گیا، تو کوئی ایسا کام نہیں کیا گیا کیونکہ ایوان میں تقریر وہی کرسکتا ہے جس نے ترمیم داخل کروائی ہو۔وزیر ریلوے نے کہا کہ 20 اور 22 کو اپوزیشن کی کانفرنس اور اے پی سی ناکام ہوگی

اور یہ سوائے جلسے اور جلوسوں کے سوا کچھ نہیں کرسکتے،انہوں نے ایک سوال کے جواب میں انہوں نے کہاکہ کوئی ریڈلائن کراس نہیں کی گئی، شام میں میری شہبازشریف اور بلاول بھٹو سے ملاقات ہوئی تو سب پرباش ہے، شہباز شریف کا مورال تھوڑا کمزور تھا اور اس نے اسمبلی میں کوئی غلط بات نہیں کی۔انہوں نے کہا کہ گزشتہ روز پیپلزپارٹی زیادہ فعال تھی۔

اس وقت زیادہ پڑھی جانے والی خبریں

اس وقت زیادہ پڑھی جانے والی خبریں

اوپر